پوست کے اندر سے جو باریک بیج نکلتے ہیں ان جو خشخاش کہتے ہیں۔ یہ کالے اور سفید رنگ کے ہوتے ہیں مگر عام طور پر صرف سفید بیجوں کو استعمال کیا جاتا ہے۔ خشخاش کا کھانوں میں استعمال بہت عام ہے خاص طور پر کوفتوں کے سالن اور ڈبل روٹی بنانے کے عمل میں اس کا استعمال بہت اہم ہے۔ خوراحک کے علاوہ خشخاش کے بہت سے طبی فوائد بھی ہیں جیسا کہ خشخاش کا تیل نکالا جاتا ہے جو جوڑوں کے درد میں بےحد فائدہ مند ہے۔

خشخاش میں صحت بخش اجزاء جیسے میگنیشیم، میگنیز، آیوڈین، زنک، تھیامن، فولیٹ، کیلشیم ، آئرن، فاسفورس ، اومیگاتھری فیٹی ایسڈ اور فائبر پائے جاتے ہیں۔ اینٹی انفلیمیشن خصوصیات کے باعث دیگر بیماریوں میں بھی مفید ہے۔

بھرپور نیند:

اگر برابر مقدار میں تربوز اور خشخاش کے بیجوں کو پیس لیا جائے اور رات سونے سے آدھ گھنٹہ پہلے ایک گلاس دودھ کے ساتھ ایک چمچ کھا لیں، ساری رات بھرپور نیند کا لطف اٹھایا جا سکتا ہے۔

دماغی صحت:

دماغ وہ واحد آرگن ہے جو چوبیس گھنٹے کام کرتا ہے۔ اس کی صحت اور کام کرنے کی صلاحیت کے لیے غذا لینی چائیے۔ خشخاش کا حریرہ دماغی صحت کے لئے بے حد مفید ہے۔ اس کی افادیت بڑھانے کے لیے اس میں بادام پیس کر شامل کیے جا سکتے ہیں۔

سوکھی خارش:

سوکھی خارش سے نجات پانے کے لیے خشخاش کے پاؤڈر میں چند قطرے لیموں کا رس اور حسب ضرورت پانی ملاکر لگائیں۔

گرمی کا سر درد:

گرمیوں کے موسم میں لو اور گرمی کی وجہ سے سر کا درد عام کی بات ہے۔ خشخاش کو پیس کر پانی ملا کر پیسٹ بنا کر پیشانی پر لگائیں تو گرمی سے ہونے والا سردرد دور ہوجاتا ہے۔

وزن میں کمی:

وزن میں کمی آج کل ہر کسی کا اہم مشن ہے خاص کر خواتین کا۔ وزن میں کمی کرنے کے لیے بازار میں مختلف ادویات بھی دستیاب ہیں جن کا فائدہ کی بجائے اکثر نقصان ہوتا ہے۔ اومیگا تھری فیٹی ایسڈ خشخاش میں پائے جاتے ہیں جو وزن کو گھٹانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں اسی لئے روزمرہ اس کے استعمال سے آپ وزن میں نمایاں کمی کرسکتے ہیں۔

آنکھ اور کان کا درد:

خشخاش کو پانی میں پکا کر اس پانی سے سینکائی کرنے سے درد دور ہوجاتا ہے۔

نزلہ اور کھانسی:

جیسا کہ آج کل کرونا وائرس کا طوفان برپا ہے اس کے ساتھ ساتھ عام نزلہ ذکام کا بھی راج ہے اور سب تھوڑا سا بھی نزلہ ہو جانے پر پریشان ہو جاتے ہیں۔ نزلہ اور کھانسی کو بھگانے کے لیے ہم آپکو آسان طریقہ بتاتے ہیں۔ خشخاش کو پانی میں پکا کر ایک چٹکی نمک ملا کر جوشاندہ تیار کریں اور ٹھنڈا ہونے پر چھان کر پی لیں۔ نزلہ اور کھانسی ٹھیک ہوجاتی ہے۔

سر کی خشکی:

سر کی خشکی صرف خواتین کا نہیں بلکہ مردوں کا بھی ایک اہم مسئلہ ہے کیونکہ اس کے باعث بال جھڑنے کا عمل بھی تیز ہوجاتا ہے۔ اس کے لئے خشخاش کو پیس کر دہی ملا کر اسکیلپ پر لگانے سے سر کی خشکی دور ہوجاتی ہے۔

خشک جلد:

خشخاش کو پیس کر اس میں دودھ اور شہد شامل کریں اور اس کو اپنی جلد پر لگائیں اور جلد کی خشکی سے نجات پائیں۔

جوڑوں کا درد:

خشخاش جوڑوں کا درد دور کرنے میں مفید ہے اس کا تیل لگانے سے بھی جوڑوں کے درد میں افاقہ ہوتا ہے۔ اگر آپ پین کلر کی جگہ اس کا استعمال کریں تو زیادہ مفید رہتا ہے۔

Share: