جب آپ ذہنی دباؤ کا بھی شکار ہو تو چیزوں کو یاد کرنا مشکل ہو جاتا ہے. اسٹریس براہ راست یا بالواسطہ یادداشت کو متاثر کرتا ہے. ذہنی دباؤ کا شکار ہونے کی صورت میں آپ کا جسم کارٹیسول نامی ہارمون خارج کرتا ہے. کارٹیسول میموری کو کمزور کرنے کاباعث بنتا ہے خاص طور پر لونگ ٹرم میموری بری طرح متاثر ہوتی ہے. مستقل اسٹریس کے نتیجے میں دماغ سکڑنا شروع ہو جاتا ہے جو دماغ کے خلیات اور ہپوکیمپس کو نقصان پہنچانے کا باعث بنتا ہے. اس طرح دماغ کا وہ حصہ جو پرانی یادداشتیں محفوظ رکھتا ہے یا نئی میموری کو اسٹور کرتا ہے بری طرح متاثر ہوتا ہے.

2005 میں شائع ہونے والے نیوروسائنس کی رپورٹ کے مطابق مستقل کئی ہفتوں یا مہینوں تک رہنے والا اسٹریس دماغ کے میموری اور لرننگ والے حصوں کے خلیات کا رابطہ آپس میں منقطع کر دیتا ہے حتی کہ تھوڑے عرصے تک رہنے والا اسٹریس بھی دماغ کے ان حصوں کے آپس میں رابطے کے ختم ہو جانے کا سبب بنتا ہے.

2016 میں شائع ہونے والی ایک اور رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اسٹریس نہ صرف یاداشت کو متاثر کرتا ہے بلکہ دماغ کے یاداشت کو محفوظ کرنے کے طریقے کار اور میموری سسٹم کو تبدیل کر کے رکھ دیتا ہے لہذا ذہنی صلاحیتوں اور یادداشتوں کو محفوظ رکھنے کے لئے خود کو ذہنی دباؤ سے بچانا بے حد ضروری ہے.

Share: