کرپٹو کرنسی بٹ کوائن کی شرح تبادلہ 20 فی صد گراوٹ کے ساتھ 6,200 ڈالر سے نیچے گر گئی جس کی وجہ دنیا بھر کی سٹاکس اور فوریکس مارکیٹ میں چھا جانے والی مندی ہے۔ منگل کو بٹ سٹمپ ایکسچینج کے تحت ورچوئل کرنسی کی شرح تبادلہ 6,190 ڈالر رہی، بٹ کوئن کی شرح تبادلہ میں گذشتہ سال 26 گنا اضافہ ہوا تھا اور ریکارڈ 19,511 ڈالر پر گئی۔

اس وقت بھی ماہرین نے اس کی قدر میں 50 فی صد تک کمی آنے کا امکان ظاہر کیا تھا۔ یورپ، جاپان اور امریکا کے سنٹرل بینکوں نے اس یونٹ بارے اپنے خدشات ظاہر کیے ہیں اور کہا ہے کہ انھوں نے اپنے کسٹمرز کو کریڈٹ کارڈز کے بٹ کوئن کی خریداری سے روک دیا ہے۔

تصویر بشکریہ ورلڈ کوائن انڈیکس
تصویر بشکریہ ورلڈ کوائن انڈیکس

 

Share: